عبدالحمیدعدم

عبدالحمید عدم نے اپنی شاعری میں "ساغر ،مئے،مینا،پیالہ،جام"وغیرہ جیسے الفاظ کثرت سے استعمال کیے ہیں،جس کی وجہ سے انہیں بعض لوگوں نے "شاعرِ خرابات" بھی کہا ہے،یہاں عبدالحمید عدم کی شاعری پیش کی جارہی ہے

جو تیرے فقیر ہوتے ہیں

اس کی پائل اگر چھنک جائے

خالی ہے ابھی جام ، میں کچھ سوچ رہا ہوں

زُلفِ برہم سنبھال کر چلئے

کہاں سے چل کے اے ساقی کہاں تک بات پہنچی ہے

ہم کچھ اس ڈھب سے تیرے گھر کا پتا دیتے ہیں

ساقی شراب لا کہ طبعیت اداس ہے

جہاں انسان بستے ہیں وہاں لغزشیں بھی ہوتی ہیں

اس نے کہا کہ ھم بھی خریدار ھو گئے

وہ فصلِ گل ، وہ لبِ جوئبار یاد کرو

یوں جستجوئے یار میں آنکھوں کے بل گئے

غموں کی رات بڑی بے کلی سے گزری ہے

توبہ کا تکلف کون کرے حالات کی نیت ٹھیک نہیں

ستارے بیخود و سرشار تھے ، کل شب جہاں میں تھا

مطلب معاملات کا ، کچھ پا گیا ہوں میں

زندگی اک خوبصورت سانپ ہے


abdul hameed adam maikada urdu poetry
adam|tu maikaday main
abdul hameed adam dil poetry
adam| totte huwe dil
abdul hameed adam two line urdu poetry
adam| gham e zeest
abdul hameed adam 

best sher
adam|zehr kha ke
abdul hameed adam best urdu poetry
adam|sadma shadeed
abdul hameed adam best book
adam|achi surat
abdul hameed adam best shayari
adam|tera razdan
abdul hameed adam best shairy
adam|dil ki sada
best poetry abdul 

hameed adam
adam|taskeen e dil
abdul hameed adam
adam|sitare bekhud
abdul hameed adam
adam|maikada tha
abdul hameed adam
adam|ahd e masti
abdul hameed adam
adam|tuba ka takluf