اکبر الہ آبادی

اکبر الہ آبادی اردو کے سب سے بڑے طنزیہ شاعر مانے جاتے ہیں،اکبر الہ آبادی کا دور ہندوستان پہ انگریزوں کے قبضہ کا دور تھا،اس دور میں مسلمانوں کی تہذیب اور اقدار کو مسخ کرنے کی شدید کوشیش کی گئیں،اکبر الہ آبادی نے اپنی شاعری میں ان غیر اسلامی رسوم اور چیزوں کو نشانہ ِ تنقید بنایا جو اسلامی حوالے یا اسلامی اقدار اور تہذیب کی رو سے قابلِ اعتراض تھیں اکبر الہ آبادی نے سنجیدہ شاعری بھی بہت اچھی کی ہے

نئی تہذیب سے ساقی نے ایسی گرمجوشی کی

کہوں کس سے قصۂ درد و غم، کوئی ہمنشیں ہے نہ یار ہے

انہیں شوق عبادت بھی ہے اور گانے کی عادت بھی

اکبر الہ آبادی کے طنزیہ اشعار

اے بُتو بہرِخُدا درپئے آزار نہ ہو

ہنگامہ ہے کیوں برپا تھوڑی سی جو پی لی ہے

غمزہ نہیں ہوتا کہ اشارہ نہیں ہوتا

آنکھیں مجھے تلووں سے وہ ملنے نہیں دیتے


akbar allahabadi
akbar | mujhe raham
akbar allahabadi
akbar | hazrat e darwin
akbar allahabadi best poetry
akbar |dil mera jis se
akbar allahabadi best shayari
akbar | duniya main hon
akbar allahabadi ghazal
akbar | gamza nahin
akbar allahabadi poetry
akbar | hangama hai
akbar allahabadi shayari
akbar | aarzu koi main ne
akbar allahabadi sher
akbar | yahi farmate
akbar allahabadi
akbar allahabadi aik qata
akbar allahabadi qata
akbar | be-sod hai